Thursday, May 11, 2017

Nahi ho Aap toh kaabah bhi kaabah ho nahi sakta

Nahi ho Aap toh kaabah bhi kaabah ho nahi sakta

Zamane me kahi aisa khalifa ho nahi sakta
Koi insaa'n imam e asr (atfs) jaisa ho nahi sakta

Hazaro'n muntakhab karlein kisi ko janashee'n apna
Magar woh naam ka hoga woh maula ho nahi sakta

Ali ki dil me ulfat hai isi baa'es me padhta hoon
Kahi Nahjul balagha jaisa khutba ho nahi sakta

Imaam e asr ki sarkar me islaam hi hoga
Kisi mazhab ka bhi us waqt ghalba ho nahi sakta

Ay Maulood e haram ke shahzaade dil yeh kehta hai
Nahi ho aap to kaabah bhi kaabah ho nahi sakta

Wilayat ka tere ustaad me zeeshan hai jaisa
Hazaaro'n dil me dhondo par woh jazba ho nahi sakta

✍ Zeeshan Azmi
11th May 2017
Neema e Shaban
Shab e barat

*نہیں ہیں آپ تو کعبہ بھی کعبہ ہو نہیں سکتا*

زمانہ میں کہیں ایسا خلیفہ ہو نہیں سکتا
کوئی انساں امام عصر جیسا ہو نہیں سکتا

ہزاروں منتخب کر لیں کسی کو جانشیں اپنا
مگر وہ نام کا ہوگا وہ مولا ہو نہیں سکتا

علی کی دل میں الفت ہے اسی باعث میں پڑھتا ہوں
کہیں نہج البلاغہ جیسا خطبہ ہو نہیں سکتا

امام عصر کی سرکار میں اسلام ہی ہوگا
کسی مذھب کا بھی اس وقت غلبہ ہو نہیں سکتا

اے مولود حرم کے شاہ زادہ دل یہ کہتا ہے
نہیں ہیں آپ تو کعبہ بھی کعبہ ہو نہیں سکتا

ولایت کا تیرے استاد میں ذیشان ہے جیسا
ہزاروں دل میں ڈھونڈھو پر وہ جذبہ ہو نہیں سکتا

✍ ذیشان آعظمی

No comments:

Post a Comment

Your comments are appreciated and helpful. Please give your feedback in brief.